Online News Portal

سپریم کورٹ کا بڑا فیصلہ ،وفاقی و صوبائی حکومتوں کو دریاﺅں اورنہروں کے اطراف میں جنگلات کیلئے شجرکاری کاحکم

0 98

اسلام آباد:نئی گاج ڈیم تعمیر کیس میں سپریم کورٹ نے وفاقی و صوبائی حکومتوں کو دریاﺅں اورنہروں کے اطراف میں جنگلات کیلئے شجرکاری کاحکم دیدیا،عدالت نے فوری طور پر دریاﺅں اورنہروں کے اطراف میں شجرکاری کاحکم دیدیااوردریاﺅں کے اطراف کی زمین پر کاشت کاری سے بھی روک دیا۔

عدالت نے وفاق اور سندھ سے نئی گاج ڈیم کی تعمیر کی ٹائم لائن طلب کرتے ہوئے ڈیم کی تعمیر جلد مکمل کرنے کی بھی ہدایت کردی ۔

چیف جسٹس پاکستان نے کہاکہ دریاﺅں کے ساتھ کچے کی زمین پر کاشت کاری نہیں ہو سکتی ،دریاﺅں اورنہروں کے اطراف درختوں کی کلیاں نہ لگائی جائیں ،چیف جسٹس گلزاراحمد نے کہاکہ کم ازکم 6 فٹ کا درخت لگا کر اس کو محفوظ بنائیں ۔

عدالت نے شجرکاری پر تمام حکومتوں سے ایک ماہ میں پیشرفت رپورٹ طلب کرلی ،چیف جسٹس پاکستان نے کہاکہ موسمیاتی تبدیلیوں سے پانی کی قلت پیدا ہو سکتی ہے ،دریاﺅں اورنہروں کے ساتھ درخت لگانے کی کوئی سکیم نہیں ہے ؟،درخت لگانے کاسلسلہ ختم ہو گیا ہے، شیشم کے درخت پنجاب میں ختم ہو گئے ہیں ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.