Online News Portal

مارکیٹ میں مہنگائی ٹرین کی رفتار کم ہونے لگی

0 242

لاہور: (عوامی درشن) مارکیٹ میں مہنگائی ٹرین کی رفتار کم ہونے لگی، پیاز، ٹماٹر، لہسن، آلو اور چینی کی قیمت ریورس گیئر میں آ گئی تو ادرک، سبز مرچ اور بھنڈی کی قیمت قابو میں نہیں آ رہی۔ برائلر گوشت اور انڈے مہنگائی کی دوڑ میں سب کو پیچھے چھوڑنے لگے۔سبزی اور برائلر مارکیٹ میں قیمتوں میں اتار چڑھاؤ جاری، کچھ سستا ہوا تو بعض اشیاء مہنگی ہو گئیں۔ مارکیٹ میں دسمبر کے پہلے دو ہفتے میں پیاز 80 روپے سے کم ہو کو 60 روپے فی کلو ہو گیا۔ ٹماٹر 140 سے 120 روپے کلو پر آ گئے جبکہ لہسن کی فی کلو قیمت 300 روپے پر برقرار ہے۔ آلو کی قیمت 20 روپے نیچے آ گئی، آلو 60 روپے کلو دستیاب ہیں۔ پھول گوبھی 15 روز میں 70 روپے سے 40 روپے کلو پر آ گئی۔
مہنگی ہونے والی سبزی میں ادرک کی قیمت آؤٹ آف کنٹرول ہو گئی، ادرک 650 روپے سے 800 روپے کلو تک پہنچ گیا۔ سبز مرچ 25 روپے اضافے سے 225 روپے کلو ہو گئی۔ آؤٹ آف سیزن بھنڈی 70 روپے اضافے کے ساتھ 220 روپے کلوفروخت ہونے لگی۔ پالک کی فی کلو قیمت 40 روپے پر برقرار ہے۔مرغی کا گوشت دو ہفتے میں 10 روپے تک سستا تو ہوا لیکن اب بھی برائلر گوشت کی قیمت 318 روپے کلو ہے۔ انڈے 15 روپے اضافے سے 192 روپے درجن ہو گئے۔عوام نے کم ہوتی قیمتوں کو بھی زیادہ قرار دیا، کہتے ہیں خریداری جیب پر بوجھ بنتی جا رہی ہے۔ 20 کلو آٹے کا تھیلا 860 روپے میں دستیاب ہے جبکہ چینی 15 روپے سستی ہو کر 85 روپے فی کلو تک فروخت ہو رہی ہے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.